Covid-19 Now Spreading Due To Young Citizens

’کورونا میں ملیریا کی دواؤں کا استعمال مہلک ہے‘

پاکستان میں بعض ڈاکٹروں نے ملیریا کی دواؤں سے کورونا کے مریضوں کے علاج کے دعوے کیے ہیں لیکن غیرملکی ماہرین کا کہنا ہے کہ ان دواؤں پر ابھی تحقیق چل رہی ہے اور ان کا بے جا اور غلط استعمال خطرناک بلکہ مہلک بھی ہو سکتا ہے۔ وائس آف امریکا کے مطابق کورونا وائرس کی نئی مہلک قسم کا علاج ڈھونڈنے کے لیے دنیا بھر میں کم از کم 70 مختلف پراجیکٹس پر کام چل رہا ہے اور ویکسین پر تحقیق امریکا، اسرائیل، چین، جرمنی، ہانگ کانگ، فرانس، آسٹریلیا اور کینیڈا جیسے ملکوں میں جاری ہے۔ جرمن فارماسوٹیکل ایسوسی ایشن کے مطابق اگر اس سال کووڈ ۱۹ کی ویکسین کا علاج مل بھی جائے تب بھی اسے عام شہریوں تک پہنچانے میں بہت وقت لگے گا۔